Whatsapp Whatsapp
Telefon Call

FUEہیئر ٹرانسپلانٹیشن

fue method

FUE ہیئر ٹرانسپلانٹیشن ٹیکنالوجی کیا ہے؟
ان لوگوں کے لیے جنہوں نے بال ٹرانسپلانٹ کرنا چاہتے ہیں۔ ان کا سوال یہ ہو گا کہ بال ٹرانسپلانٹیشن کی کونسی ٹیکنیک بہترین ہے؟ جواب یہ ہے کہ FUE Techniqueجس میں FUEفولیکیولر یونٹ ایکسٹریکشن یاانفرادی فولیسائل ایکسٹریکشن 145145طریقہ کار بہترین ٹیکنیک ہے۔
FUEہیئر ٹرانسپلانٹ ٹیکنیک سرجیکل طریقہ سے  (Follicular Micro Transplant)فولیولر مائکرو ٹرانسپلانٹ ٹیکنیک ہے جسکے ذریعہ  Folliclesکو انسان کے ڈونر ایریا سے نکال کر بغیر سلائیوں کی مدد اور بغیر کسی نشان کے چھوڑ ے کشید کیا جاتا ہے۔
ان فولیولر یونٹس کو ایک، دو، تین یا چار بالوں کے گروپ یعنی قدرتی گروپوں میں نکالا اور تیار کیا جات اہے۔ اصولی طور پر اس سے بہتر ٹیکنیک کوئی نہیں ہے جسکی قدرتی فارم کو برقرار رکھتے ہوئے فولیسلز کو ڈونر ایریا سے بہت احتیاط سے نکالا جاتا ہے۔

FUEٹیکنیک سے کون سے لوگ فائدہ اٹھا سکتے ہیں؟
٭ جنہیں محدود اور کنٹرولڈ بالوں کے گرنے یا نقصان کا سامنا ہے۔
٭ جو تکلیف سے بچنے کو ترجیح دیتے ہیں۔
٭ کم کثافت کے ڈونر سائیٹس کے حامل ۔
٭ جو اپنے پرانے ہیئر پلانٹیشن کے نشانات چھپانا چاہتے ہیں۔
فولی سیلس FUE ٹیکنیک سے نکالنا ایک نہایت آسان اور درد سے پاک طریقہ کار ہے جو دوسرے ٹرانسپلانٹیشن اور درد سے پاک طریقہ کار ہے جو دوسرے ٹرانسپلانٹیشن ٹیکنیکس کے مقابلہ میں بہت سادہ طبی عمل ہے۔ یہی وجہ ہے کہ کسی بھی نقصان کا خطرہ اس عمل میں نہیں ہوتا اور نہ ہی ڈونر زون کی حساسیت کو کسی قسم کا نقصان نہیں ہوتا ۔

سوئیوں کے سائز اور عمل درآمد ایک کلیدی کردار ادا کرتا ہے ۔ یہی وجہ ہے کہ FUE کی کامیابی کا انحصار مناسب عمل داری کا ہر ممکن چھوٹا استعمال ہے۔ FUEکے درست سائز کا انتخاب فیصلہ کن کردار ادا کرتا ہے جو ک ہاس کے عمل درآمد کرنے والے کو الیفائیڈ پروفیشنل پر ہوتا ہے ۔ چونکہ FUEٹیکنیک کوئی ناگوار سرجری نہیں اس لیے ہیئر ٹرانسپلانٹیشن زون چند دنوں میں شفا پا جاتا ہے بغیر کسی اعصابی نقصان کے۔

FUEٹیکنیک کے فوائد:
اس ٹیکنیک سے فائدہ احانے والے سرجری کے آٹھ دنوں کے بعد اپنے کھیلوں سے لطف اندوز ہو سکتے ہیں۔ اسی دوران لگائے گئے فولیکولرز Follicularsاپنے قائم شدہ حصوں میں جڑ بناتے ہیں۔
FUEٹیکنیک کا دوسرا فائدہ پورے جسم میں مختلف ممکنہ متبادل ڈونر زون کا پتہ چلانا ہے ۔ یہ ممکن ہے کہ FUEکے ذریعہ جسم کے وہ حصے جہاں بالوں کے بہتات ہو سے لے کر مطلوبہ علاقہ میں ٹرانسپلانٹ کر دیے جائیں۔

FUEٹیکنیک کے ذریعہ کون ہیئر ٹرانسپلانٹیشن کرا سکتا ہے؟
FUEتیکنیک اچھی صحت کے حامل اور ہر عمر کے لوگوں کے لیے دستیاب ہے جو ہیئر ٹرانسپلانٹیشن کرانا چاہتے ہیں۔ اس کے لیے ضروری ہے کہ ڈونر ایریا میں وافر مقدار میں اور اچھی حالت میں گھنے بال موجود ہوں۔
ابتدائی عمروں میں بال ٹرانسپلانٹیشن کو ترجیح دی جاتی ہے کہ ہارمونل وجوہات اور غیر مستحکم بالوں سے درج ذیل عمروں میں مزید سرجری ممکن ہو سکتی ہے ۔ اس کے علاوہ ذاتی جمالیاتی توقعات کو وقت میں تبدیل کر سکتے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ 30-40سال کی عمر میں بہت حوصلہ افزا نتائج حاصل ہو سکتے ہیں۔ لہذا 30سال کے بعد ہیئر ٹرانسپلانٹیشن تجویز کیا جات اہے ۔ تاکہ نوجوانوں کے ہارمونل اور ذاتی جمالیاتی توقعات کو مدِ نظر رکھا جا سکے۔

لوگوں کی عمر کے علاوہ دیگر عوامل جو کہ ہیئر ٹرانسپلانٹیشن سرجری کے معیار اور نتیجہ پر اثر انداز ہوتے ہیں جیسے کہ:
٭ ڈونر زون کی کثافت
٭ ٹرانسپلانٹیشن زون کی حد
٭ بالوں کی مقدار جو کہ فولیلیولر یونٹ سے نکالی گئی
٭ جنس (مرد یا عورت)
٭ نکالے گئے بالوں کا معیار و مضبوطی
٭ بالوں کی قسم اور رنگ

FUEچھے نتائج کے لیے dermalogistکے مشورے کو اہمیت دی جاتی ہے ۔ باقی کام درست عمل درآمد کرنے والے اور صحیح کلینک کا انتخاب پر منحصر ہے۔

FUEہے ہیئر ٹرانسپلانٹیشن میں جدید ترین ٹیکنالوجی :
FUEٹیکنیک انتہائی جدید ترین ٹیکنالوجی میں Roboticطریقہ علاج ہے ۔ دوسری اور تیسری نسل کی Roboticٹیکنالوجی بھی دستیاب ہیں۔ جدید ترین ٹیکنالوجی حصول کی خواہش کی تکمیل کے لیے ہیئر ٹرانسپلانٹیشن کلینک اور عمل درآمد ٹیم کی مہارت شامل ہوتی ہے۔
روبوٹک ٹیکنالوجی کے ذریعہ درست کی بدولت یہ ممکن ہوا کہ زیادہ فولیکیولر یونٹس بغیر کسی نشان کے نکالا جا سکے۔ موثر روبوٹک ٹیکنالوجی کا استعمال اچھے نتائج حاصل کرنے کا انحصار تجربہ کار سرجنز پر ہوتا ہے۔

FUEٹیکنیک کے فوائد:
اس ٹیکنالوجی کے بے شمار فوائد ہیں جن سے لوگ استفادہ حاصل کر سکتے ہیں جیسے کہ:
٭ طریقہ کار
٭ منحصر دورانیہ
٭ نتائج کا تلسلسل
٭ نشانوں کا مندمل ہونا
یہی وجہ ہے کہ FUEٹیکنالوجی کو انتہائی ترجیح دی جاتی ہے اور دو ہی ہفتے میں انسان اپنی کھیلوں کی سرگرمیوں میں مصروف ہو جاتا ہے۔

کونسا ہیئر ٹرانسپلانٹیشن ٹیکنیک بہترین ہے؟
اس مضمون میں ہم بحث کریں گے کہ کونسی ہیئر ٹرانسپلانٹیشن ٹیکنیک سب سے بہترین ہے۔
FUE – FUE Technologyٹیکنالوجی

 

IceGraftہیئر ٹرانسپلانٹیشن :
آئس گرافٹ ٹرانسپلانٹیشن ایک مخصوص محلول کی مدد سے بنایا جاتا ہے جو ڈونر سائٹ سے حاسل کیے گئے بالوں کو مضبوط بناتا ہے جیسے وہ انسانی جسم میں مضبوط ہوتے ہیں۔
ایک اور جدید اور بہترین ہیئر ٹرانسپلانٹیشن ٹیکنیک DHI براہ راست ہیئر امپلیمنٹیشن (Direct Hair Implementation) اس ٹیکنیک میں بالوں کی قدرتی گرافٹس (grafts)کی حفاظت سب سے بڑا فائدہ ہے۔ اگرچہDHIٹیکنیک کچھ زیادہ دورانیہ کا ہو سکتا ہے مگر شفاء کا وقت قلیل ہوتا ہے اور نشان کے بغیر۔

آپ بہترین ہیئر ٹرانسپلانٹیشن طریقہ کار کا فیصلہ کیسے کر سکتے ہیں۔
جب آپ فیصلہ کریں کہ آپ نے ہیئر ٹرانسپلانٹیشن کرانا ہے تو آپ کو کچھ اشاروں کا خیال رکھنا ہو گا۔ ہر ہیئر ٹرانسپلانٹیشن کی اچھائیاں اور برائیاں ہوتی ہیں۔
سب سے پہلے ہیئر ٹرانسپلانٹیشن ٹیکنیک کا طریقہ اور سرجری آلات اور بغیر نشان سرجری کو مد نظر رکھنا ہوتا ہے پھر شفاء کا مختصر وقت اور جلد شفاء ہے۔

trapianto capelli turchia trasplante capilar turquia hair transplant turkey greffe de cheveux turquie